افغانستان میں عیدالضحی پر غیر اعلانیہ جنگ بندی جاری، داعش کا صدارتی محل پر راکٹ حملہ

کابل: (کوہ نور نیوز) افغانستان میں عیدالضحی پر غیر اعلانیہ جنگ بندی پر عمل جاری ہے، کابل میں نمازعید کے دوران صدارتی محل پر راکٹ حملہ ہوا، داعش نے حملےکی ذمہ داری قبول کرلی۔ عید کےموقع پر افغانستان بھر میں سرکاری افواج اور طالبان کے مابین لڑائی کی اطلاعات تو موصول نہیں ہوئیں لیکن دارالحکومت کابل میں نماز عید کے دوران راکٹ حملے کا ایک واقعہ پیش آیا۔ افغان وزارت داخلہ کےمطابق نماز عید کی ادائیگی کے دوران تین راکٹ صدارتی محل پر گرے۔ تاہم صدر غنی اور دیگر اہل کاروں نے کھلے میدان میں منعقدہ اس تقریب کے دوران نماز کی ادائیگی جاری رکھی، جس کی تصدیق ٹیلی ویژن کی لائیو کوریج سے بھی ہوئی، حملے کی ذمہ داری داعش نے قبول کی ہے۔ دوسری جانب افغانستان میں روس کے سفیر ضمیر کابلوف کا کہنا ہے کہ طالبان مذاکرات میں شامل دیگر فریقوں کی جانب سے پیش کردہ سیاسی پیش کش کو زیر غور لانے پر تیار نظر آتے ہیں، ضرورت اس بات کی ہے کہ موجودہ تعطل کو ختم کرنے کے لیے مذاکرات کے عمل کو آگے بڑھایا جائے۔