صنعتی صارفین کیلئے بجلی استعمال کے اوقات کی بنیاد پرٹیرف سکیم کے خاتمہ کی منظوری

اسلام آباد: (کوہ نور نیوز) کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) نے صنعتی صارفین کیلئے بجلی استعمال کرنے کی اوقات کی بنیادپرٹیرف سکیم کے خاتمہ کی منظوری دیدی ہے۔ کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی کااجلاس وزیراعظم کے مشیربرائے خزانہ ومحصولات ڈاکٹرعبدالحفیظ شیخ کی زیرصدارت منعقدہوا۔ اجلاس میں وزیرنجکاری محمد میاں سومرو، وفاقی وزیراقتصادی امورمخدوم خسرو بختیار، وزیر ریلویز شیخ رشید احمد، مشیر تجارت عبدالرزاق داﺅد، معاون خصوصی ریونیو ڈاکٹر وقار مسعود، معاون خصوصی برائے پاورتابش گوہر اور وزیراعظم کے مشیر برائے ادارہ جاتی اصلاحات ڈاکٹرعشرت حسین نے شرکت کی۔ سٹیٹ بینک کے گورنرویڈیولنک کے ذریعہ اجلاس میں شریک ہوئے۔اجلاس میں پاورڈویژن کی جانب سے صنعتی صارفین کیلئے بجلی استعمال کرنے کی اوقات کی بنیادپرٹیرف سکیم کے خاتمہ کا کیس پیش کیا جس کامقصدکورونا وائرس کی وبا کے دنوں میں بجلی کے پیک اوراپ پیک اورز کے درمیان امتیازختم کرکے صنعتی شعبہ کی معاونت کے پیکج کے تحت صنعتی سرگرمیوں کو فروغ دینا ہے۔ ایک اورمقصد مشکل وقت میں صنعتی یونٹوں کومسلسل چلانے کیلئے ترغیب دینا ہے۔ ای سی سی نے صنعتی صارفین کیلئے بجلی استعمال کرنے کی اوقات کی بنیادپرٹیرف سکیم کے خاتمہ اوراس ضمن میں ایک واپڈا ڈسکوز اور کے الیکٹرک کیلئے متعلقہ ایس آر اوز میں ترمیم کرنے کی منظوری دیدی جس کے تحت صنعتی صارفین پیک اوراورز میں اپ پیک کی شرح سے ٹیرف اداکریں گے۔پیک اوراپ پیک اورز ٹیرف کے خاتمہ کا اطلاق یکم نومبر2020 سے 30 اپریل 2021 تک کی مدت کیلئے ہوگا۔