2021ء ٹی ٹونٹی ورلڈکپ بھارت کی بجائے یو اے ای منتقل ہو سکتا ہے: وسیم خان

لاہور: (کوہ نور نیوز،ویب ڈیسک) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیف ایگزیکٹو وسیم خان نے عندیہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ متحدہ عرب امارات (یو اے ای) کے 2021ء ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ کی میزبانی کا امکان ہے جو فی الحال اگلے سال اکتوبر میں بھارت میں ہونا ہے۔ ایک یوٹیوب چینل پر انٹرویو دیتے ہوئے وسیم خان کا کہنا تھا کہ بھارت میں کورونا وائرس کے کیسز کی بڑھتی ہوئی تعداد میگا ایونٹ کے لیے خطرہ ہے جس کی وجہ سے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کو میگا ایونٹ منتقل کرنے پر مجبور کیا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارت میں ورلڈ ٹی ٹونٹی کے انعقاد کے بارے میں اب بھی کچھ غیر یقینی صورتحال موجود ہے، کووڈ 19 کی صورتحال کی وجہ سے ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ کو متحدہ عرب امارات بھی منتقل کیا جاسکتا ہے۔ یاد رہے کہ انڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل) کا 13 واں سیزن بھی متحدہ عرب امارات میں ہوا کیونکہ حالیہ مہینوں میں ہندوستان میں کورونا وائرس کےکیسز میں بے تحاشہ اضافہ دیکھنے کو مل رہا ہے۔ وسیم خان نے آئی سی سی سے اس یقین دہانی کے مطالبہ کے اپنے موقف کا اعادہ بھی کیا کہ پاکستانی کھلاڑیوں کو ہندوستان میں 2021ء میں شیڈول ٹی 20 ورلڈ کپ میں شرکت کے لیے ویزا کے حصول میں کسی قسم کی پریشانی کا سامنا نہیں کرنا پڑے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیئر مین احسان مانی نے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کو خط لکھ کر درخواست کی ہے کہ بھارت اور پاکستان کے مابین سیاسی تعلقات کو دیکھتے ہوئے اگر آئی سی سی اور بی سی سی آئی ہمیں ویزے جاری کیے جانے کے بارے میں تحریری یقین دہانی کرائے تو بہتر ہوگا۔ یاد رہے کہ ایشیاء کپ 2020ء کے میزبان ، پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے وبائی امراض کی وجہ سے ٹورنامنٹ ملتوی ہونے کے بعد سری لنکا کرکٹ (ایس ایل سی) کے ساتھ ٹورنامنٹ کے میزبانی کے حقوق کا تبادلہ کیا تھا۔ اس انتظام کے ذریعے سری لنکا اب جون 2021ء میں متوقع ایشیاء کپ کی میزبانی کرے گا جبکہ پی سی بی ایشیاء کپ 2022ء کی میزبانی کرے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ اگلا ایشیاء کپ جون 2021ء میں سری لنکا میں منعقد کیا جائے گا اور 2022ء کے ایشیا کپ کے لئے ہمیں اب میزبانی کے حقوق مل گئے ہیں۔