افغانستان میں جنگی جرائم، معصوم شہریوں کے قتل میں ملوث آسٹریلوی فوجی برطرف

کینبرا: (کوہ نور نیوز،ویب ڈیسک) آسٹریلیا نے افغانستان میں جنگی جرائم میں ملوث فوجیوں کی برطرفی کا عمل شروع کر دیا ہے۔ اب تک اس جرم میں ملوث 10 فوجیوں کو برطرف کر دیا گیا ہے۔ آسٹریلیا کی سپیشل سروسز سے تعلق رکھنے والے دس کمانڈوز کو برطرفی کے لئے شوکاز نوٹس جاری کر دیئے گئے ہیں جبکہ سنگین جرائم میں ملوث 19 اہلکاروں کو تفتیش کے لئے پولیس کے حوالے کرنے کا امکان ہے۔ سرکاری میڈیا کے مطابق نہتے افغانوں کے قتل میں ملوث اہلکاروں کو برطرفی کے ساتھ ساتھ تادیبی کارروائی کا سامنا بھی کرنا پڑے گا۔ خیال رہے کہ حال ہی میں شائع ہونے والی ایک رپورٹ میں ہولناک انکشافات کرتے ہوئے کہا گیا تھا کہ افغان جنگ کے دوران وہاں تعینات آسٹریلوی فوجیوں نے بغیر کسی وجہ کے درجنوں افغان شہریوں کو موت کے گھاٹ اتار دیا تھا۔ خیال رہے کہ آسٹریلوی فوج نے اپنے جن اہلکاروں کو نوکری سے برخاست کیا ہے ان کے نام صیغہ راز میں رکھے گئے ہیں۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ان فوجیوں کو چودہ روز کا وقت دیا گیا ہے، اس دوران وہ اپنے اوپر لگائے گئے الزامات کا دفاع کر سکتے ہیں۔ خیال رہے کہ رپورٹ شائع ہونے کے بعد آسٹریلوی فوج نے افغانستان سے معافی مانگی تھی۔