وفاقی وزرا کا اپوزیشن کو کورونا وبا کے باعث ورچوئل جلسوں کا مشورہ

لاہور: (کوہ نور نیوز) وفاقی وزرا نے اپوزیشن کو کورونا وبا کے باعث ورچوئل جلسوں کا مشورہ دیدیا، ان کا کہنا ہے کہ یہ لوگ اپنے ذاتی مفاد کیلئے عوام کی جان کے درپے ہیں، کورونا پھیلاؤ مہم" پی ڈیم کی خودغرضی کا ثبوت ہے، مہلک وائرس سے زندگیوں کوخطرہ ہے۔ جلسوں کے معاملے پر حکومت اور پی ڈی ایم آمنے سامنے، وزرا اور معاونین نے اپوزیشن پر کڑی تنقید کی۔ فواد چودھری کا کہنا ہے کہ اپوزیشن اپنے دو کلو گوشت کیلئے پوری گائے ذبح کرنا چاہتی ہے، نادانو اگر جلسوں سے بیماری پھیلتی ہےاور لوگوں کی زندگیاں داؤ پر لگتی ہیں تو کاہے کی سیاست۔ وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے اپوزیشن کو ورچوئل جلسے کرنے کا مشورہ بھی دیدیا۔ حماد اظہر کہتے ہیں یہ بیماری کے پھیلاؤ کو بڑھا کر کیا مقصد حاصل کرنا چاہتے ہیں، اپوزیشن کی "کورونا پھیلاؤ مہم" اِن کی خودغرضی کا ثبوت ہے۔ وزیرمنصوبہ بندی اسدعمر نے اپنے ٹویٹ میں کہا کہ گزشتہ 15روز کےدوران پشاور اور ملتان میں وینٹی لیٹر پرجانیوالے کورونا مریضوں کی شرح 200 فیصد رہی۔ سیاسی قیادت کیلئے پیغام ہے کورونا خطرہ نہیں، کورونا سے زندگیوں کوخطرہ ہے۔ معاون خصوصی شہبازگل کا کہنا ہے کہ یہ لوگ اپنے ذاتی مفاد کیلئے عوام کی جان کے درپے ہیں، ہوشیار باش! عوام ان جعلسازوں کو پہچان لیں جو بغض عمران میں ہر حد کو پھلانگنے کے درپے ہیں۔ جب عمران خان اسمارٹ لاک ڈاؤن کا مشورہ دے رہے تھے تب یہ سب سخت ترین لاک ڈاؤن کے حامی تھے۔