سی پیک ورکنگ گروپ، پشاور ڈی آئی خان موٹر وے، سوات اور دیر ایکسپریس پر اتفاق

اسلام آباد: (کوہ نور نیوز) سی پیک ورکنگ گروپ نے پشاور ڈی آئی خان موٹر وے، سوات اور دیر ایکسپریس پر اتفاق کیا ہے۔ ٹرانسپورٹ انفرااسٹرکچر پر چین پاکستان اکنامک کاریڈور جوائنٹ ورکنگ گروپ کا آٹھواں اجلاس وڈیو لنک کے ذریعے وزارت مواصلات میں منعقد ہوا،جس میں وفاقی سیکریٹری مواصلات ظفر حسن،چین کے نائب وزیر برائے ٹرانسپورٹ ڈائی ڈانگ چنگ کے علاوہ چین کے انٹرنیشنل کوآپریشن کے ڈپٹی ڈائریکٹر جنرل شان ھانگ جن،نیشنل ہائی وے اتھارٹی کے چیئرمین سکندر قیوم نے بھی شرکت کی۔ وزارت خارجہ، سی پیک اتھارٹی، وزارت ریلوے،وزارت میری ٹائم،حکومت سندھ،حکومت خیبر پختونخوا،حکومت بلوچستان اور سول ایوی ایشن اتھارٹی کے نمائندوں نے بھی اجلاس میں شرکت کی۔ اجلاس میں جن منصوبوں پر غور وخوض کے بعد اتفاق کیا گیا ان میں پشاور۔ڈیرہ اسماعیل خان موٹر وے، سوات ایکسپریس وے فیز۔ II اور دیر ایکسپریس وے بھی شامل ہیں۔ اجلاس میں ایم ایل ون پراجیکٹ، کراچی سرکلر ریلوے،پشاور سرکلر ریلوے اور کوئٹہ ماس ٹرانزٹ پروجیکٹ پر بھی بریفنگ دی گئی، چترال۔ شندور۔ گلگت، نوکنڈی۔ ماشکیل، پنجگور اور میرپور۔ مظفر آباد۔مانسہرہ منصوبوں پر غور و خوض کیا گیا۔ وفاقی سیکرٹری مواصلات ظفر حسن نے سوات ایکسپریس وے اور ایم ون سے منسلک ہونے والی چترال۔ چکدرہ موٹروے کو سی پیک کے مغربی روٹ میں شامل کرنے کی تجویز دی۔