میاں صاحب!آپ نے ملاقاتوں کے لیے ایلچی بھیجے،ناکامی پر جمہوریت یاد آگئی:اسدعمر

وفاقی وزیر رہنما اسد عمر نے کہا ہے کہ آپ اپنے ایلچی ملاقاتوں کے لیے بھیجتے ہیں، جب ہر جگہ سے ناکامی ہوئی تو تب آپ کو جمہوریت یاد آگئی۔ میاں صاحب!سوال کرنے کا وقت گزرگیا ہے ، آپ کے جواب دینے کا وقت آگیا ہے۔ وفاقی وزیراسدعمر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے نوازشریف کو شدید ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ میاں صاحب!آپ کے بھائی اور پارٹی کے لوگ این آراو مانگتے ہیں، آپ اپنا ایلچی ملاقاتوں کے لیے کیوں بھیجتے ہیں? جب آپ کو ہر جگہ سے ناکامی کا منہ دیکھنا پڑاتو جمہوریت یاد آگئی۔ انہوں نے کہا کہ نوازشریف کی تقاریر سول بالادستی اور جمہوریت اپنی کرپشن بچانے کے لیے ہے۔ نوازشریف کا مسئلہ کسی فرد کے ساتھ نہیں ، اداروں کے ساتھ ہے جو ان کی اطاعت نہیں کرتے.قوم کے اداروں کو سیاست میں گھسیٹنے کی کوشش نہ کریں۔ انہوں نے کہا میاں صاحب آپ سزا یافتہ مجرم ہیں، آپ سوالات پوچھنے والے کون ہوتے ہیں؟ا ب آپ کے سوال کرنے کا وقت گزر گیا ہے، اب آپ کو جواب دینا ہوگا۔ بتائیں، یوسف رضا گیلانی کے خلاف کالا کوٹ پہن کر کون عدالت گیا؟ وفاقی وزیرکا کہنا تھا کہ میاں صاحب اگر اتنے دلیر ہیں تو آپ کے منہ سے کلبھوشن کا نام کیوں نہیں نکلتا؟ہم سیاست دانوں کوغداری کے سرٹیفکیٹ دینے پریقین نہیں رکھتے ہیں، اس کا فیصلہ عوام کرے گی ۔