دپیکا، سارہ اور شردھا کا ڈرگ پارٹیز میں شرکت کا اعتراف کرلیا

ممبئی: (کوہ نور نیوز،ویب ڈیسک) بھارتی میڈیا کے مطابق معروف اداکارہ دپیکا پڈوکان بالی ووڈ منشیات کیس میں نیشنل نارکوٹکس بیورو کی انکوائری کمیٹی کے سامنے پیش ہوگئیں۔ 4 گھنٹے سے زائد جاری رہنے والی تفتیش کے دوران دپیکا کو موبائل فون استعمال کرنے سے روک دیا گیا تھا۔ دپیکا نے اپنے بیان میں منیجر کرشمہ پرکارش کے ساتھ 2017 کی واٹس ایپ کی گروپ چیٹ کو تسلیم بھی کیا جس کی وہ ایڈمن بھی تھیں جس میں دو الفاظ مال اور ہیش برائے حرف ’’کے‘‘ لکھا تھا جہاں حرف ’’کے‘‘ سے مراد دپیکا کی منیجر کرشمہ ہیں تاہم اداکارہ نے منشیات کے استعمال کے الزام کو مسترد کردیا۔ ادھر ابھرتی ہوئی خوبرو اداکارہ سارہ خان بھی انکوائری کمیٹی کے سامنے پیش ہوئیں جس کے دوران انہوں نے سشانت سے قریبی تعلقات کی تصدیق کی تاہم اداکارہ نے منشیات کے استعمال سے یکسر انکار کردیا۔ دوسری جانب اداکارہ شردھا کپور بھی نیشنل نارکوٹکس بیورو کے روبرو پیش ہوئیں جہاں انہوں نے سشانت کی ڈرگ پارٹی میں ان کے فارم ہاؤس میں شرکت کرنے کا اعتراف کیا تاہم منشیات کے استعمال سے وہ بھی انکاری ہیں۔ واضح رہے کہ سشانت خودکشی کیس کی تفتیش کے دوران بالی ووڈ انڈسٹری میں منشیات کے استعمال کا انکشاف ہوا تھا جس پر دائرہ تفتیش کو وسیع کرتے ہوئے سشانت کی گرل فرینڈ ریا چکروتی اور ان کے بھائی کو حراست میں لے لیا گیا تھا۔