پیپلزپارٹی اور نون لیگ کا عید کے بعد آل پارٹیز کانفرنس بلانے پر اتفاق

لاہور: (کوہ نور نیوز) چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو سے ن لیگ کے رہنماوں نے لاہور میں‌ ملاقات کی جس میں‌ ملکی مجموعی سیاسی صورتحال کے علاوہ اپوزیشن کی آل پارٹیز کانفرنس عید کے بعد بلانے پر اتفاق کر لیا گیا۔ اپوزیشن کی آل پارٹیز کانفرنس کے ایجنڈے کی تیاری کا معاملہ، حزب اختلاف کی دو بڑی جماعتوں مسلم لیگ ن اور پاکستان پیپلز پارٹی کے قائدین نےاے پی سی کے ممکنہ ایجنڈے پر مشاورت کی۔ بلاول بھٹو سے ملاقات کیلئے احسن اقبال، ایاز صادق اور سعد رفیق بلاول ہاوس لاہور پہنچے اور ملک کی سیاسی، معاشی و اقتصادی صورتحال پر تفصیلی بات چیت کی۔ ملاقات میں پیپلز پارٹی کی تجویز کردہ اے پی سی کے ایجنڈے پر بھی گفتگو ہوئی، حکومت کی جانب سے انتقامی کاروائیوں اور نیب قوانین میں ممکنہ ترامیم کے امور زیر بحث آئے۔ اس موقع پر پی پی رہنما سابق وزیراعظم پرویزاشرف، قمر زمان کائرہ، چوہدری منظور اور حسن مرتضیٰ بھی موجود تھے۔ بتایا گیا ہے کہ ملاقات کے بعد اے پی سی کے ایجنڈے کی حتمی تجاویز دیگر اپوزیشن جماعتوں کے قائدین سے بھی مشاورت کی جائے گی، اپوزیشن کی دیگر جماعتیں پہلے ہی بلاول بھٹو زرداری کو اپنی حمایت کی یقین دہانی کرا چکی ہیں۔ بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے لیگی رہنما احسن اقبال نے کہا ملک میں آئینی حکمرانی کا نظام تباہ ہو چکا ہے، حکومت کو مزید گنجائش دینے کا مطلب مسائل کو فروغ دینا ہوگا۔ پی پی رہنما قمر زمان کائرہ کا کہنا تھا کہ حکمرانوں سے جان چھڑانا ضروری ہو گیا ہے۔