ویڈیو گیم کھیل کر 30 دن میں 20 پاؤنڈ وزن کم کرنے کا دعویدار نوجوان

منیلا: (کوہ نور نیوز) فلپائن کے ایک نوجوان مگوئی گیبریل نے اپنی حالیہ فیس بُک پوسٹ میں دعویٰ کیا ہے کہ اس نے صرف ویڈیو گیم کھیل کر ایک مہینے میں اپنا وزن 20 پونڈ کم کرلیا ہے۔ البتہ یہ کوئی عام ویڈیو گیم نہیں بلکہ مشہور کمپنی ’’نائنٹینڈو‘‘ کا بنایا ہوا ’’رنگ فٹ ایڈوینچر‘‘ ہے جو روایتی ویڈیو گیمز سے ہٹ کر ہے۔ اگر آپ کو اس کمپنی کا نام یاد نہیں آرہا تو بتاتے چلیں کہ ’’ماریو برادرز‘‘ اور ’’سپر ماریو‘‘ جیسے مشہور گیمز اسی کمپنی نے بنائے تھے جو آج تک مقبول ہیں۔ لیکن اس کمپنی کا نیا ویڈیو گیم ’’رِنگ فِٹ ایڈوینچر‘‘ سابقہ روایات سے بالکل مختلف ہے کیونکہ اسے کرسی یا صوفے پر بیٹھ کر کھیلا نہیں جاسکتا بلکہ کھلاڑی کو گیم کھیلتے دوران کھڑے رہنا پڑتا ہے جبکہ ورزشی انداز میں اچھل کود اور حرکت کرنی پڑتی ہے۔ گیم کھیلتے دوران اسی جسمانی حرکت کے نتیجے میں وزن بتدریج کم ہونے لگتا ہے اور یہ گیم مسلسل کھیل کر آپ بھی فٹ اور اسمارٹ رہ سکتے ہیں۔ نائنٹینڈو کمپنی نے ویڈیو گیمز پر اٹھائے جانے والے اعتراضات کو مدنظر رکھتے ہوئے خاص طور پر یہ گیم ڈیزائن کیا ہے جو ’’کھیل کھیل میں‘‘ لوگوں کو صحت مند بھی بناتا ہے۔ یہی بات اس گیم پر تبصروں میں بھی کہی جاچکی ہے۔ البتہ بعض ناقدین کو اعتراض ہے کہ ویڈیو گیم سے وزن کم کرنے والی بات نائنٹینڈو والوں نے خود ہی جان بوجھ کر پھیلائی ہے تاکہ اس سے دنیا بھر میں ان کے ویڈیو گیم کی فروخت میں اضافہ ہو۔ تاہم اس ویڈیو گیم کی سیلز رپورٹ اور اس پر کیے گئے غیر جانبدارانہ تبصرے دیکھ کر اندازہ ہوتا ہے کہ اکتوبر 2019 میں لانچ کیا گیا یہ گیم مذکورہ فیس بُک پوسٹ سے بہت پہلے ہی مقبول ہوچکا ہے۔ پاکستان میں ’’نائنٹینڈو فٹ رنگ ایڈوینچر‘‘ کی قیمت 22 ہزار روپے ہے، جو بیشتر آن لائن اسٹورز سے دستیاب ہے۔