سیاسی رہنماؤں کی وزیراعظم عمران خان کے بیمار قیدیوں کی رہائی کے فیصلے کی تعریف

اسلام آباد: (کوہ نور نیوز) وفاقی وزیربرائے انسانی حقوق شیریں مزاری اور گورنر سندھ عمران اسماعیل نے وزیراعظم عمران خان کے 65 سال سے زائد بیمار قیدیوں کی رہائی کے فیصلے کو اچھا قرار دیتے ہوئے کہا فیصلہ ریاست مدینہ کے تصورکا عکاس ہے، انصاف سب کے لئے ہونا چاہئیے تفصیلات کے مطابق اسلام آباد وفاقی وزیربرائے انسانی حقوق شیریں مزاری نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر وزیراعظم عمران خان کے 65 سال سے زائد بیمار قیدیوں کی رہائی کے فیصلے کو اچھا قرار دیتے ہوئے کہا امیروں کو فوری ریلیف مل سکتا ہے تو غریب کو بھی ملنا چاہیے ، انصاف سب کے لئے ہونا چاہئیے۔طایک اور ٹوئٹ میں شیریں مزاری کا جرمنی میں را کے ایجنٹوں کا ٹرائل شروع ہونے کے حوالے سے کہنا تھا کہ بیرون ملک سرگرمیاں بلآخر بے نقاب ہوگئیں، جاسوسی پربھارتی جوڑے پر مقدمہ جرمن عدالت میں زیر سماعت ہے۔ دوسری جانب گورنر سندھ عمران اسماعیل نے بھی سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر وزیراعظم کے فیصلے پر کہا بیمار، ضعیف قیدیوں کی رہائی کا فیصلہ ریاست مدینہ کے تصور کا عکاس ہے، ریاست مدینہ میں سب برابر ہوتے ہیں، وزیراعظم عمران خان کا اچھا فیصلہ ہے۔ یاد رہے گذشتہ روز وزیراعظم نے 65 سال سے زائد عمر کے ایسے قیدی جو بیمار ہیں اور کسی گھناؤنے جرم کے مرتکب نہیں ان کی رہائی کا فیصلہ کیا تھا، وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی و ترقی اسد عمر نے کہا تھا کہ حکومت نے ایک ایسے پاکستان کی جانب کے ایک اور قدم بڑھایا ہے، جس میں حکومت کی اولین ترجیح ملک کا کمزور طبقہ ہے۔ خیال رہے جرمنی میں را کے ایجنٹوں کا ٹرائل شروع ہوگیا، جرمن میڈیا کے مطابق من موہن اور اس کی بیوی کنول جیت جرمنی میں مقیم سکھوں اورکشمیری تنظٰیموں کی معلومات بھارت کی خفیہ ایجنسی را تک پہنچاتے تھے، بھارتی جوڑے کو سات سال قید کی سزا ہوسکتی ہے۔