انسٹاگرام لائیکس کی تعداد پوشیدہ رکھ کر کیا مقاصد حاصل کرنا چاہتا ہے؟

لاہور: (کوہ نور نیوز) معروف فوٹو شیئرنگ ایپ ’انسٹاگرام‘ تصاویر پر ملنے والے لائیکس کی تعداد کو پوشیدہ رکھنے کا تجربہ اب امریکا میں بھی کرے گی۔ چند ماہ قبل کمپنی نے لائیکس کی تعداد کو پوشیدہ رکھنے کے تجربے کا آغاز کینیڈا، آسٹریلیا، نیوزی لینڈ، جاپان، اٹلی، آئرلینڈ اور برازیل میں کیا تھا۔ اب کمپنی لائکس کو پوشیدہ رکھنے کے حوالے سے چند دنوں میں امریکا میں بھی تجربے کا آغاز کرے گی۔ WIRED25 کانفرنس کے دوران انسٹاگرام کے سربراہ ایڈم موسیری نے گفتگو کرتے ہوئے اس بات کا اعلان کیا کہ امریکا میں اگلے ہفتے سے انسٹاگرام ایپ پر لائیکس کی تعداد کو پوشیدہ کرنے کی آزمائش کا آغاز کیا جائے گا جس میں ایپ کے چند صارفین کی پوسٹ پر لائیکس غائب ہوجائیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ پوسٹ پر لائیکس کی تعداد صرف اسے ہی نظر آئے گی جو اس پوسٹ کو اپنے اکاؤنٹ پر ڈالے گا جبکہ دوسرے اس پوسٹ پر لائیکس کی تعداد کو نہیں دیکھ سکیں گے۔ ایڈم موسیری کا کہنا تھا کہ لائیکس کی تعداد کو پوشیدہ کرنے کا مقصد یہ ہے کہ انسٹاگرام پر آپ کے فالورز کی نظر اس بات پر زیادہ ہو کہ آپ نے کیا شیئر کیا ہے، نہ کہ اس بات پر کہ آپ کی پوسٹ پر کتنے لائیکس آرہے ہیں۔ انہوں نے مزید بتایا کہ اس تبدیلی کا بنیادی مقصد صارفین کو اس دباؤ سے نکالنا ہے کہ ان کی پوسٹ پر کتنے لائیکس ہیں جبکہ لائیکس کی تعداد کو بنیاد بناکر ایک دوسرے سے موازنہ کرنے کی وجہ سے بھی یہ تجربہ کیاجارہا ہے۔