وزیراعظم سے طالبان وفد کی ملاقات، افغان امن عمل سے متعلق بات چیت

اسلام آباد:(کوہ نور نیوز) وزیراعظم عمران خان سے طالبان وفد نے ملاقات کی جس میں افغان امن عمل سے متعلق بات چیت کی گئی، ملاقات میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ اور ڈی جی آئی ایس آئی بھی موجود ہیں۔ قبل ازیں افغان طالبان کے 12 رکنی وفد نے ملا عبدالغنی برادر کی سربراہی میں وزارت خارجہ میں شاہ محمود قریشی سے ملاقات کی جس میں خطے کی صورتحال اور افغان امن عمل پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ پاکستان اور افغانستان کے مابین دو طرفہ برادرانہ تعلقات ہیں، چالیس برس سے افغانستان میں عدم استحکام کا خمیازہ یکساں طور پر بھگت رہے ہیں، پاکستان صدق دل سے سمجھتا ہے کہ جنگ کسی مسئلے کا حل نہیں۔ شاہ محمود قریشی نے مزید کہا کہ افغانستان میں قیام امن کیلئے مذاکرات ہی مثبت اور واحد راستہ ہے، خوشی ہے کہ آج دنیا افغانستان پر ہمارے موقف کی تائید کر رہی ہے، پر امن افغانستان پورے خطے کے امن و استحکام کیلئے ناگزیر ہے، ہماری خواہش ہے کہ فریقین مذاکرات کی بحالی کی طرف جلد راغب ہوں۔ طالبان وفد نے افغان امن عمل میں پاکستان کے مصالحانہ کردار کی تعریف کی، فریقین نے مذاکرات کی جلد بحالی کی ضرورت پر اتفاق کیا۔