فیصلہ کن ون ڈے : پاکستان کا جنوبی افریقا کو 241 رنز کا ہدف

کیپ ٹاؤن: (کوہ نور نیوز) کیپ ٹاؤن کے نیو لینڈز کرکٹ گراؤنڈ میں کھیلے جارہے میچ میں میزبان ٹیم کے کپتان فاف ڈوپلیسی نے ٹاس جیت کر پہلے فیلڈنگ کا فیصلہ کیا۔ پاکستان نے پہلے کھیلتے ہوئے مقررہ 50 اوورز میں 240 رنز 8 وکٹوں کے نقصان پر بنائے۔ پاکستان کی جانب سے اننگز کا آغاز امام الحق اور فخر زمان نے کیا اور پہلی وکٹ پر صرف 8 رنز کی شراکت قائم کی۔ پاکستان کو پہلا نقصان امام الحق کی صورت میں اٹھانا پڑا جو 8 رنز بناکر ڈیل اسٹین کا شکار بنے۔ آخری ون ڈے میں میزبان ٹیم سیریز اپنے نام کرنے کا عزم لیے میدان میں اتری ہے جبکہ شعیب ملک کی قیادت میں قومی ٹیم بھی ٹرافی کے حصول کی خواہاں ہے۔ سیریز کے آخری اور فائنل ٹاکرے کے لیے قومی ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی اور ٹیم امام الحق، فخر زمان، بابراعظم، محمد حفیظ، کپتان شعیب ملک، محمد رضوان، شاداب خان، عماد وسیم، محمد عامر، عثمان خان شنواری اور شاہین شاہ آفریدی پر مشتمل ہے۔ اسی طرح میزبان جنوبی افریقی ٹیم میں دو تبدیلیاں کی گئی ہیں، ڈیوڈ ملر اور بیرن ہینڈرکس کی جگہ ویان ملڈر اور ڈیوائن پریٹوریئس کو شامل کیا گیا ہے۔ اس طرح پروٹیز ٹیم کوئنٹن ڈی کوک، ہاشم آملہ، ریسی وین ڈر ڈوسین، کپتان فاف ڈوپلیسی، ریزا ہینڈرکس، ایندلے فیلوک وایو، کگیسو رابادا، ڈیل اسٹین، عمران طاہر،ویان ملڈر اور وائن پریٹوریئس پر مشتمل ہے۔ واضح رہے کہ نیولینڈ کی پچز اکثر اسپن بولروں کے لیے کارآمد ہوتی ہیں اور گزشتہ چند روز کے دوران درجہ حرارت میں اضافے کے بعد پچ سے سلو بولروں کو مزید فائدہ مل سکتا ہے تاہم دونوں ٹیموں کے کپتان پرامید ہیں کہ کیپ ٹاؤن کی پچ بیٹنگ کے لیے سازگار ہو گی۔ ٹاس جیتنے کے بعد جنوبی افریقا کے کپتان فاف ڈوپلیسی کا کہنا تھا کہ 'آج کا میچ ہمارے لیے چیلنج ہے اور ٹیم کا بیٹنگ اور بولنگ کمبی نیشن اچھا ہے'۔ دوسری جانب پاکستانی کپتان شعیب ملک کا کہنا تھا کہ 'یہ ہمارے لیے پریشر گیم اور ’ڈو اور ڈائی‘ ہے'، پچ بیٹنگ کے لیے سازگار ہے لیکن نمی کے باعث فرق پڑسکتا ہے۔