13 جماعتیں الیکشن سے خوفزدہ، یہ جو قدم اٹھاتے ہیں ان کے گلے پڑ جاتا ہے، شیخ رشید

اسلام آباد: (کوہ نورنیوز) سابق وفاقی وزیر شیخ رشید نے کہا ہے کہ 13 جماعتیں الیکشن سے ڈری ہوئی ہیں، یہ جو قدم اٹھاتے ہیں ان کے اپنے گلے پڑ جاتا ہے۔ لال حویلی راولپنڈی کے باہر عوام سے خطاب کرتے ہوئے عوامی مسلم لیگ کے سربراہ نے کہا کہ ان کا ایجنڈا یہ ہے کہ انہیں مقبول اور محبوب عمران خان پسند نہیں ہے، ان کی ایک ہی سازش ہے کہ عمران خان کو مائنس کیا جائے، عمران خان کو زہر بھی دیا جا سکتا ہے، سلو پوائزننگ بھی کی جاسکتی ہے۔ شیخ رشید نے کہا یہ لوگ سمجھتے تھے شاید ہم ڈر جائیں گے، ہم نسلی ہیں، ہم اصلی ہیں، جس کے ساتھ کھڑے ہوتے ہیں، چٹان کی طرح کھڑے ہوتے ہیں، نوازشریف صاحب میں نے لندن میں آپ کے ساتھ والے دفترمیں پریس کانفرنس کی۔ انہوں نے کہا کہ فواد چودھری کل نہیں تو پرسوں آجائے گا، جو قدم اٹھاؤ گے آپ کے گلے پڑے گا، عمران خان مزید مقبول ہو جائے گا، ہم آئین و قانون کے دائرے میں رہنا چاہتے ہیں، عمران خان اگر جیل میں ہوگا تو کسی کا باپ بھی اس کے خلاف جلسہ نہیں کر سکتا۔ سابق وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ پاکستان کی قومی سالمیت کو خطرہ لاحق ہو گیا ہے، ہم اس ملک کے قومی اثاثے نہیں بکنے دیں گے، بلاول کو بیچ دیں گے، یہ الیکشن سے بھاگے ہوئے لوگ ہیں، 13 پارٹیاں اس قابل نہیں کہ یہ الیکشن میں جائیں۔ شیخ رشید کا کہنا تھا کہ ہمارا جینا مرنا پاکستان کے ساتھ ہے، ہم پاکستان میں خانہ جنگی دیکھ رہے ہیں، جمہوریت کو شدید خطرہ لاحق ہے، ملک میں سیاسی عدم استحکام ہے، سماج تباہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ شہباز شریف قبر کی قیمت ختم کر دو، مردوں کی سوچ لے کر آنے والا خاندان کہہ رہا ہے میں کپڑے بیچ دوں گا، اس خاندان میں پھوٹ پڑ گئی ہے، یہ عوام میں جانے کے قابل نہیں ہیں۔ شیخ رشید کا کہنا تھا کہ اپنے اداروں سے کہنا چاہتا ہوں عوام ہی فوج ہے، عوام دکھی ہو تو فوج دکھی ہے، لوگوں نے نکلنا ہے، مارچ ،اپریل سیاسی طور پر انتہائی خطرناک اور سنگین ہے، انہوں نے کہا کہ بلاول اپنی بہاروں میں ہیں ،ان کا واپس آنے کا دل نہیں کر رہا، محسن نقوی آصف زرداری کے ہاتھ کی گھڑی اور جیب کی چھڑی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جو آدمی پرچی ان کے پولنگ سٹیشن سے کرائے گا وہ بھی عمران خان کو ووٹ ڈالے گا، 90 دن کے اندر گورنر انتخابات کرانے کا پابند ہے، 100 دن کی جنگ ہے، پاکستان جیتے گا،عوام جیتے گی، عمران خان جیتے گا۔ شیخ رشید نے کہا کہ رانا ثنا چور، ڈاکو، بے ایمان ہے، 77وزرا ہیں، 28 کے پاس محکمے نہیں ہیں، انہوں نے کہا کہ اگر میری گرفتاری ہو تو میرے لیے کوئی نہ نکلے، میں جیل میں خوش ہوں گا، جیل میرا سسرال ہے۔